بلاگ معلومات

کشمیر ایشو!دوسرا،تیسرا راستہ اور ہمارے کرنے کا کام

گزشتہ تحریر میں دو راستوں کا ذکر کیا تھا۔۔۔ •سفارتی و قانونی •جنگ ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ خدا کی قسم مایوسی کی بات نہیں کر رہا، رئلیسٹک بات کر رہا ہوں سفارتی محاذ پر بہترین کھیلنے کا وقت تھا، مگر زمینی حقائق یہی بتا رہے کہ اس محاذ پر کوئی خاطر خواہ کامیابی نہیں ملی ابھی تک۔۔۔۔ کیوں یہ مجھے نہیں معلوم۔۔!! نااہلی بھی ہو سکتی دلالی بھی اور کوئی تیسرا آپشن بھی جس کے لیے میں دعاگو ہوں۔۔!!

مزید پڑھیں: کشمیر ایشو(حل اور سٹانس)

خدا کی قسم میں کسی کو مورد الزام نہیں ٹھہرا رہا، اور نہ ہی یہ میرا طریقہ کار ہے، فتوے داغنا اور سرٹیفیکیٹ بانٹنا صرف آپشنز رکھ رہا ہوں، کہ کشمیر ایشو پر ہر ہر پہلو کو مدنظر رکھیں، اور مکمل طور پر کانشئیس رہیں، امید ہے کچھ بہتر ترین حل کیا جائے گا، اس معاملے پر لیکن اگر خدانخواستہ خدانخواستہ کشمیری خون کی بے حرمتی ہوئی تو جو جو بھی ذمہ دار ہوا اس کو ذمہ دار ٹھہرایا جائے، جس جس کی کوتاہی ہوگی وہ جواب دہ ہوگا ، رعایا کو بھی کشمیر کو بھی اور بروز محشر بھی، پھر وہ حکومت ہو، فوج ہو، عوام ہو یا کوئی بھی ستون، کشمیر ایشو پر ہر ایک کو اپنا بیسٹ دینا ہے، جو نہ دے گا اس کے ہاتھ برابر خون سے رنگے ہوں گے۔۔۔!!

جو راستہ اپنائیں مگر اپنائیں ضرور،ہمیں کوئی شوق نہیں فیس بک پر بیٹھ کر مامے بننے کا اور نہ اس بات میں شک کے پالیسی میکر اور فیصلہ ساز ذہن ہم سے بہتر اپروچ رکھتے ہوں گے۔۔ہمارا مطالبہ بس یہ کہ دوبارہ سے پاکستان کو ٹوٹنا نہ ہو،خدانخواستہ۔۔!! خیر اللہ کرے یہ کوئی تیسرا آپشن یا نااہلی ہی ہو کیوں کہ دلالی ہوئی تو تمام راستے آٹومیٹکلی بند ہو گئے، لیکن نا اہلی کی صورت میں ہمارے پاس جنگ کا راستہ موجود ہے۔۔۔!!! اور ایک تیسرا بھی جو اس سے کہیں زیادہ موثر جو پہلے ہم روس اور امریکہ کے خلاف آزما بھی چکے مگر یہ دونوں راستے سفارتی محاذ پر #نااہلی یا #ناکامی ہونے پر ہی ہوں گے۔۔۔!!

امریکہ کہہ رہا ہے، دونوں ممالک کا باہمی معاملہ ہے پر امن طریقے سے حل کیا جانا چاہیئے۔۔ اقوام_متحدہ کی بکواس دونوں ممالک شملہ معاہدہ کی رو سے باہمی طور پر معاملات کو حل کریں۔۔ چین نے بھی سی او کے کی ہی بات کی ایکچولی باقی پاکستان کے حق میں اس کو موڑ تروڑ کر ہم شو کر سکتے لیکن ہے نہیں۔۔ روس ، میڈیا کے مطابق روس نے کشمیر ایشو کو انڈیا کا اندرونی معاملہ قرار دے دیا ہے۔۔

یہ وڑ گئی سفارتکار: اب پیچھے پھر دو راستے جنگ اور گوریلا وار(امریکہ اور روس کے خلاف لڑی جانے والی) دونوں میں سے کسی کا چناؤ بھی کر لیں، ان کی نااہلی کا، تاخیر کا غم نہیں رہے گا، اگر ان دونوں کو بھی نہیں چنا جاتا تو دلالی کا علاج کوئی نہیں۔۔۔ پھر یہی ہے کہ پرو پی ٹی آئی(یوتھیے نہیں لکھتا میں) اور تھوڑے سے کنفیوژڈ پالشیے(اسں کی وضاحت الگ سے کروں گا) بجائے نشاندہی کرنے کے اور اس پر کام کر کے حکومت اور متعلقہ اداروں کو اپرووچ کرنے کے انہیں بوسٹ کرنے کے الٹا پوچا پھیرنے لگ جائیں گے جس سے نقصان یہ ہوگا کہ خدانخواستہ کشمیر گیا تو ساتھ میں ضمیر بھی جانا قوم کا۔۔۔!! تو یہ کام نہیں کرنا میرے بھائی آپکی نیت پر شک نہیں مگر حد سے زیادہ جذباتیت اور جھکاؤ کسی بڑے بہت بڑے نقصان کا باعث بن جانا۔۔۔!

لہٰذا کشمیر اور ضمیر دونوں بچانے کے لیے تمام تر وابستگیاں چھوڑ کر اپنی بھرپور ترین کوشش کر لیں، ایک بار حکومت کو، اداروں کو، میڈیا کو، عالمی برادری کو، انٹرنیشنل میڈیا کو، انسانی حقوق کی تنظیموں کو جس جس کو بھی اپروچ کر سکتے ہیں، کریں۔۔کنوینس کریں، پریشرائز کریں یا جو بھی کریں مگر اپنی سی پوری کوشش کریں۔۔بعد کے پچھتاوے سے بہتر ہے پہلے سے کم از کم اپنا حصہ ضرور ملائیں۔۔تاکہ بحیثیت قوم تو ہمارے ہاتھ کشمیری خون سے رنگے ہی جا رہے ، انفردی طور پر کم از کم بوجھ نہ ہو۔۔کہ ہم نے کشمیر کے لیے کچھ کیا نہیں۔۔۔ میں ان دنوں انتہائی مصروف ہوں، یہ چند لائنیں پرسوں سے لکھنے کی کوشش کر رہا تھا آج لکھ پایا، زیادہ تر غیر حاضر رہوں گا سوشل میڈیا سے، سی ڈی سی آفیشل پیج پر کام ہو رہا ہے کشمیر کے حوالے سے جس نے فالو نہیں کیا کر لے، اور پارٹسپیٹ کرتا جائے کام میں۔۔۔!!!

•انگلش ارٹیکل لکھے جا رہے،انٹرنیشنل گروپس اور ویب سائٹس پر پبلش ہو رہے۔۔۔ •انگلش گرافکس بن رہے،اور وائرل ہو رہے۔۔انٹرنیشنل کمیونٹی کو انگیج کرنے کے لیے۔۔۔ •انگلش ڈاکیومنٹریز پر کام ہو رہا ہے۔۔۔ •اردو تحاریر لکھی جا رہی ہیں، اور وائرل کی جا رہی ہیں۔۔۔ پاکستان کے بچے بچے کی زبان پر کشمیر آپ لا سکتے اگر آپ اپنی ذمہ داری کا احساس کرتے ہوئے پراپر کام کرتے ہیں تو۔۔لہذا یہ کریے لازمی۔۔۔۔ ••لیٹرز لکھوائے جا رہے ہیں،،جو حکومت پاکستان،،آئی ایس پی آر،،اقوام متحدہ،،عالمی انسانی حقوق کی تنظیموں،،عالمی عدالت انصاف،،سلامتی کونسل اور او آئی سی کو میل کیے جائیں گے آج شام یا کل تک آفیشل پیج پر آپ کو ڈیٹیلز دے دی جائیں گی

بقیہ ممالک میں جو احتجاج ہو رہے،بھارت کے اندر جو احتجاج ہو رہے،کشمیر میں جو ظلم و ستم ہو رہا سب کو انگلش اردو ہر طرح سے پھیلائیے جو بھی متعلقہ کنٹینٹ ملتا ہمیں سینڈ کریں ہم اس پر انگلش سب ٹائٹل لگا کر دیں گے آپکو،اور ٹرانسلیٹ کر کے بھی دیں گے۔۔۔۔ اگلے چند دن کے اندر اندر اگر سفارتی محاذ پر کوئی سولڈ سٹانس نہیں اپنایا جاتا یا ان دو اقدامات (جنگ/مجاہدین کو فری ہینڈ) میں سے کچھ بھی نہیں ہوتا تو فوج کو بوسٹ کریں کہ وہ آگے آئے اس معاملے پر،چاہے حکومت کے ساتھ چاہے حکومت کو بائی پاس کر کے۔۔یہ ایشو ایسا ہے کہ یہاں افواج پاک کی مداخلت ضروری ہے۔۔اس پر کام کریں جس جس کا جو جو لنک اور جو جو وہ کر سکتا کرے،سوشل میڈیا پر یا گراؤنڈ لیول پر۔۔۔اور ہاں ایک کام لازمی کریں آگاہی عوام کو اس ایشو پر لگائیں تاکہ یہ معاملہ ٹھنڈا نہ پڑے اس کے لیے،کچھ چیزیں ••عوامی اجتماع کریں خود سے گلی محلے سے لے کر سٹی لیول تک جو آپ کر سکتے اور لوگوں کو بتائیے،اوئیرنیس دیں اور ان کی ذمہ داریوں کا احساس دلائیں۔۔۔ ••پوسٹرز،بینرز لگائیں،اپنے گلی محلے شہروں بازاروں میں اس حوالے سے چھپوا کر۔۔۔ ••مساجد کے علماء سے رابطہ کریں،ان سے اجازت لے کر خود بھی نمازکے بعد وہی پر کھڑے ہو کر بات کریں،اور ان سے گزارش کریں کہ وہ بھی جمعے کے خطبے میں کشمیر پر لازمی بات کریں، بحیثیت مسلمان اور بحیثیت پاکستانی انہیں کشمیر ایشو پر ان کے ذمہ داریاں بتائیں۔۔۔