ابھی کچھ لوگ باقی ہیں جو اُردو بول سکتے ہیں
براؤزنگ زمرہ

کالمز

بدنصیب باپ، بد قسمت اولاد

ماں باپ اور اولاد کا رشتہ ایک ایسا پائیدار اور لازوال روپ رکھتا ہے کہ جو دنیا کے کسی معاشرے، ثقافت، ماحول اور خطے میں اپنی تاثیر اور محبت نہیں بدلتا۔ آپ دو باہم لڑنے والے ملکوں، قبیلوں یا برادریوں کے لڑکے لڑکی کی شادی کروا دیں یا وہ محبت…
مزید پڑھ...

نوازشریف کا ہدف۔آئی ایس آئی کیوں؟(آخری قسط)

دنیا کی ہر انٹیلی جنس ایجنسی کی طرح آئی ایس آئی کے خدوخال اور کام کرنے کا طریقہ کار بھی ویسا ہی ہے۔ اس لئے گزشتہ کئی سالوں سے آئی ایس آئی پر لکھے جانے والے مواد میں اس کے کام کرنے کے انداز، مختلف جاسوسی کرنے کے ہتھکنڈے یا جنگ کو دشمن…
مزید پڑھ...

نوازشریف کا ہدف۔آئی ایس آئی کیوں؟… ( حصہ اول )

آج سے 22 سال قبل ٹیکساس کے دارالحکومت آسٹن کے شہر میں موجود ٹیکساس یونیورسٹی کے اسکول آف پبلک پالیسی میں ایک ایسی بریفننگ میں شریک ہوا جو وہاں کے انسانی حقوق پر کام کرنے والے پروفیسروں اور ریسرچ سکالرز نے دی تھی۔ یہ بریفننگ سزائے موت کے…
مزید پڑھ...

بڑے شاہی محلات کے چھوٹے مکین از رئوف کلاسرا

جوں جوں نئی نئی چیزوں کا علم ہوتا ہے تو دل دکھی ہوتا ہے۔ ملائشیا کے مہاتیر محمد نے وزیراعظم بنتے ہی جو احکامات جاری کیے ان میں سے ایک یہ تھا کہ سابق وزیراعظم نجیب رزاق اور ان کا خاندان ملک سے باہر نہیں جاسکتا ۔ دوسرا حکم یہ دیا اس کے گھر پر…
مزید پڑھ...

باباسکول

آپ اگر بینکاک سے شمال کی طرف سفر کریں تو 80 کلومیٹر بعد تھائی لینڈ کا صوبہ فرانا خون سی اوتھایا آ جاتا ہے‘ حکومت نے صوبے کی سب ڈسٹرکٹ چیانگ راک نوئی میں ایک دلچسپ تجربہ کیا‘ یہ دنیا کا دلچسپ ترین تجربہ ہے‘ حکومت نے ٹاؤن میں بزرگوں کا پہلا…
مزید پڑھ...

سچا ہونا کافی نہیں ہوتا

میاں نواز شریف وقت گزرنے کے ساتھ ساتھ اپنی سیاست اور اپنی زندگی دونوں کےلئے خطرناک ہوتے جا رہے ہیں‘ کیوں؟ ہم جواب کی طرف آنے سے پہلے ذرا سا پس منظر میں جھانکیں گے۔یہ ملک ہندوستان کے مسلمانوں کےلئے بنا تھا‘ یہ حقیقت ہے لیکن اس حقیقت کے پیچھے…
مزید پڑھ...

میاں محمد نواز شریف : ایک نفسیاتی مطالعہ

علم نفسیات کا کوئی عالم ہو، نفسیاتی معالج یا پھر جسے اپنے علم نفسیات کی بنیاد پر لوگوں کی شخصیات کا مطالعہ کرنے کا شوق ہو، تو ایسا کوئی بھی شخص اگر گذشتہ چند ماہ سے میاں محمد نواز شریف کے چہرے کا غور سے مطالعہ کرتا رہا ہو تو وہ ایک انجانے…
مزید پڑھ...

میاں نوازشریف کا مستقبل

چھبیس نومبر 2008ءکی رات10 سے گیارہ بجے کے درمیان دس دہشت گرد ممبئی کے آٹھ مقامات کلابا‘ نریمان ہاﺅس‘ سی ایس ٹی ریلوے سٹیشن‘ تاج محل ہوٹل‘ اوبرائے ہوٹل‘لیپوڈ کیفے‘ سنٹر کروز اور ولے پارلے میں داخل ہوئے‘ اندھا دھند فائرنگ کی‘ گرنیڈ پھینکے اور…
مزید پڑھ...

ظلم و دہشت اور دو مختلف روئیے

گیارہ ستمبر کا واقعہ اور اس کے بعد گزرنے والے ماہ و سال اور ان سالوں میں ہونے والے واقعات یوں لگتا ہے امریکی عوام اور مسلم امہ دونوں کے اجتماعی لاشعور کا حصہ بن چکے ہیں۔ اجتماعی لاشعور کا تصور اپنے زمانے کے مشہور نفسیات دان کارل ینگ (Carl…
مزید پڑھ...

کل کی داستان

میری کل احسن اقبال سے بات ہوئی‘ آواز کی توانائی واپس آ چکی تھی‘ وہ گرم جوش لہجے میں بولے ”اللہ تعالیٰ نے کرم کیا‘ مجھے لاہور سے ایک بزرگ کا فون آیا‘ میں نے بات سننے کےلئے جوں ہی فون کان کے ساتھ لگایا‘ ٹھاہ کی آواز آئی اور فون میرے ہاتھ سے…
مزید پڑھ...