ابھی کچھ لوگ باقی ہیں جو اُردو بول سکتے ہیں
براؤزنگ زمرہ

کالمز

زمینداری،مزارعت اور سود …( حصہ دوم )

اسلام کی معاشی تعلیمات کو جس طرح جدید سرمایہ دارانہ اور جاگیردارانہ نظام کے زیر اثر تہذیبوں، معاشروں اور حکومتوں نے مسخ کیا ہے اس کی مثال گزشتہ چودہ سو سال کی امت مسلمہ کی تاریخ میں نہیں ملتی۔ جیسے کیمونزم کا خوف پیدا کرکے سرمایہ داری کو…
مزید پڑھ...

نواز شریف ہرگز قدم نہ بڑھانا

بات معمولی تھی لیکن معمولی باتیں عقل مندوں کےلئے معمولی نہیں ہوتیں۔لاہور میں میرے ایک جاننے والے ہوا کرتے تھے‘ وہ پلاسٹک کے پرزے بناتے تھے‘ کروڑوں میں کھیلتے تھے‘ اللہ تعالیٰ نے نام‘ رزق اور دین کی نعمت سے نواز رکھا تھا‘ وہ ہزار…
مزید پڑھ...

ملک کے نومنتخب ارکان اسمبلی سے ایک سوال

میں آپ کو 71 سال پیچھے لے جانا چاہتا ہوں‘یہ ملک کہاں سے شروع ہوا تھا؟یہ ملک کانٹوں سے شروع ہوا تھا‘ پاکستان میں 15 اگست 1947ءکو سرکاری دفتر نہیں تھے‘اگر دفتر تھے تو میز اور کرسی نہیں تھی‘اگر کرسی اور میز تھی تو کاغذ اور قلم نہیں تھا اور اگر…
مزید پڑھ...

تماشا لگانے کا فن از رئوف کلاسرا

اگرچہ نیب کے انیس برس قبل قیام سے اب تک کسی کو اس ادارے سے امیدیں نہیں رہیں۔ شروع کے چند ماہ‘ جب جنرل مشرف واقعی احتساب کے موڈ میں تھے، کچھ ہل جل ہوئی تھی۔ پھر جنرل مشرف کو بھی سیاست کا چسکا لگ گیا۔ کسی نے سمجھایا‘ یہ اقتدار روز روز نہیں…
مزید پڑھ...

زمینداری،مزارعت اور سود… ( حصہ اول )

ستر کی دہائی کی بات ہے، پوری دنیا دو گروہوں میں تقسیم تھی، سرمایہ دارانہ نظام کی دنیا اور اشتراکی دنیا۔ روس کے بالشویک انقلاب کو آئے تقریبا پچاس سال بیت چکے تھے اور اس وقت اس کے زیراثر ریاستوں کی تعداد بھی درجن سے زیادہ تھی جو دنیا کے ہر…
مزید پڑھ...

کیا عمران خان کامیاب حکمران ثابت ہو سکیں گے؟ از آصف محمود

ایک طویل جدوجہد کے بعد عمران خان وزیر اعظم بننے میں تو کامیاب ہو ہی چکے ، سوال اب یہ ہے کیا وہ ایک کامیاب حکمران بھی ثابت ہو سکیں گے ؟ میرے خیال میں اس سوال کا جواب اثبات ہے ۔ عمران کے پاس ناکام ہونے کی کوئی گنجائش نہیں ، اسے ہر حال…
مزید پڑھ...

خوف خطرے سے زیادہ خطرناک ہوتا ہے

سول ایوی ایشن کی ہسٹری میں 2010ء میں ایک حیران کن واقعہ پیش آیا اور یہ واقعہ بعد ازاں انسانوں کے اجتماعی رویوں اور بھیڑ چال کے نقصانات کی مثال بن گیا‘ 25اگست کی صبح افریقہ کے ملک کانگو کے دارالحکومت کنشاسا سے ایک چھوٹا طیارہ اڑا‘ یہ طیارہ…
مزید پڑھ...

یہ ہے وہ زوال! از رئوف کلاسرا

پاکستان کے ایک بڑے کالم نگار ایاز امیر نے پچھلے دنوں اوپر نیچے کیا شاندار کالم لکھے ہیں ‘ اور وہ بھی اردو میں ۔ ان کالموں کو پڑھ کر پہلے عجیب سرور طاری ہوا‘ پھر بے یقینی ‘ حیرت اور آخر میں افسردگی۔ واقعی یہ سب کچھ کبھی اس ملک میں ہوتا تھا…
مزید پڑھ...

عمران خان۔ یکساں نظامِ تعلیم کا نفاذ ( مکمل کالم)

دنیا کی قدیم ترین تہذیبوں سے لے کر آج کے جدید ترین ترقی یافتہ تہذیبی خدوخال کا مطالعہ کیا جائے تو معاشروں کے عروج کی داستانیں ہمیشہ علم کی روشنائی سے تحریر ہوئیں ہیں۔ کوئی ایک قوم بھی ایسی نہیں جس نے اپنی جہالت پر اکتفا کر لیا ہو، علم کے…
مزید پڑھ...

اصل امتحان اپوزیشن کا ہے

آپ دنیا جہاں کے لباس دیکھ لیجئے آپ کو ان میں آزار بند ضرور ملے گا‘ یہ آزار بند ناڑے‘ پٹکے اور رسی کی شکل میں ہوگا یا پھر یہ بیلٹ یا پیٹی کوٹ کی صورت میں ہو گا لیکن یہ ہوگا ضرور‘یہ بیلٹ یا یہ آزاربندکیوں ضروری ہے؟ ہمیں اس کیوں کے جواب کےلئے…
مزید پڑھ...