ابھی کچھ لوگ باقی ہیں جو اُردو بول سکتے ہیں

شارٹ فلم از گل نوخیزاختر

فریج کھولئے‘ بوتل اٹھائیے‘ گلاس میں پانی بھریے اور پی جائیے۔کپڑوں کی الماری کھولئے‘ پسند کا لباس منتخب کیجئے اور پہن لیجئے۔کھانے کی میز پر تشریف لائیے‘ موجود چیزوں میں سے جوبھی پسند ہو منتخب کیجئے ‘ پلیٹ میں ڈالئے اور کھا لیجئے۔موبائل…

غاؤں غاؤں از گل نوخیزاختر

بچپن میں سنتے تھے کہ زیادہ علم حاصل کرنے سے انسان پاگل ہوجاتا ہے۔ بہت دفعہ سوچا کہ علم انسان کو پاگل کیسے کر سکتا ہے؟ لیکن اب میں یقین سے کہہ سکتا ہوں کہ واقعی ایسا ہوتاہے۔میں نے اس کا عملی مظاہرہ دیکھا ہے۔ اکثر گھر میں بذریعہ ڈاک کتابیں…

آج بیٹھے بٹھائے کیوں یاد آگئے! از گل نوخیزاختر

غالباً1995 کی بات ہے۔ میرے دوست شہزادصغیر نے مجھے ایک عظیم خوشخبری سنائی کہ 3.5 ایم بی کی ہارڈ ڈسک مارکیٹ میں آگئی ہے ۔مجھے یاد ہے ہم سب کی آنکھیں پھٹی کی پھٹی رہ گئی تھیں۔ آج 100 جی بی والی ڈسک بھی چھوٹی لگتی ہے۔وہ پینٹیم فور جو…

گاڑی پارک کرنے کے طریقے از گل نوخیزاختر

راشد صاحب فالودہ کھانے کے بڑے شوقین ہیں۔ کل تپتی دوپہر میرے دفتر پہنچے اور فرمائش ظاہر کی کہ’’انار کلی توں پھلودہ کھان چلنے آں‘‘۔ میں نے جھرجھری لی اور ہاتھ جوڑے کہ حبس اور گرمی بہت زیادہ ہے‘ شام کو چلیں گے۔ انہوں نے قہقہہ…

یہ تو ہوتا ہے‘ یہ تو ہوگا! از گل نوخیزاختر

میرے معتبرذرائع کے مطابق دُنیا میں بہت سی چیزیں ایسی ہیں جو کبھی نہیں بدل سکتیں۔میں آج اِن میں سے کافی ساری چیزیں آپ کے سامنے پیش کرنے کی جسارت کر رہا ہوں۔انشاء اللہ اگر یہ کالم پچاس سال بعد بھی پڑھا گیا تو ہر چیز ویسی ہی ملے گی کیونکہ…

پٹواری اور یوتھیا از گل نوخیزاختر

یہ دونوں بھائی میرے محلے میں رہتے تھے۔بڑے کا نام شاکر اور چھوٹے کا عادل تھا۔اللہ جانتا ہے میں نے دو بھائیوں میں ایسی بے مثال محبت بہت کم دیکھی۔دونوں ایک دوسرے کے بہترین دوست بھی تھے۔ کرکٹ کھیلنے جاتے تو دونوں اکٹھے جاتے‘ محلے میں کسی سے…

یہ رہا کامیابی کا نسخہ از گل نوخیزاختر

مجھے ایسی کتابیں بہت پسند ہیں جن میں زندگی بدلنے کے مختلف سنہری طریقے دیے ہوتے ہیں۔ پچھلے دنوں ایک کتاب دیکھی جس کا عنوان تھا’’امیر ہونے کے طریقے‘‘۔ پہلی فرصت میں خریدی اورپہلا صفحہ پڑھنا شروع کیا۔ لکھا تھا’’اپنے کام میں بھرپور محنت کریں…

چھوٹے بھائیوں کے نام از گل نوخیزاختر

میں نے1995ء میں ایک تنظیم بنائی تھی جس کانام تھا’’چھوٹا بھائی ایسوسی ایشن‘‘۔اس تنظیم میں ہر اُسے چھوٹے بھائی کو شامل ہونا تھا جو بڑے بھائی کے ہاتھوں ذلیل ہورہا تھا‘لیکن چونکہ Usaid نے میرے منصوبے کو فنڈز فراہم نہیں کیے لہذا دو ہفتوں کے اندر…

جابر بن حیان بریانی والا از گل نوخیزاختر

میری پریشانی عروج کو پہنچی ہوئی تھی۔ سوچا پروفیسر صاحب سے ڈسکس کرتے ہیں۔ اگرچہ پروفیسر صاحب انتہائی احمقانہ اوربونگی دلیلیں گھڑتے ہیں لیکن پھر بھی پتا نہیں کیوں میں بلاوجہ ان کی طرف دوڑا چلا آتا ہوں۔ میرے چہرے پر تذبذب دیکھ کر پروفیسرصاحب…

ہاسٹل لائف از گل نوخیزاختر

حصولِ تعلیم کی خاطر گھر سے دور رہ کر جس جگہ زندگی انجوائے کی جاتی ہے وہ ہاسٹل کہلاتاہے۔ جس طرح میٹرک کی چھٹیوں کا کام شروع شروع میں بڑے اہتما م سے شروع کیا جاتا ہے‘ دستہ منگوایا جاتاہے‘ اوپر کاغذ چڑھایا جاتا ہے‘ پہلے صفحے پر مارکر سے…