ابھی کچھ لوگ باقی ہیں جو اُردو بول سکتے ہیں

حقیقت اور بیانیوں کا کھیل؟ از بلال شوکت آزاد

دنیا میں ایسا کوئی مرض, کوئی مسئلہ, کوئی مصیبت اور کوئی ایسی پریشانی نہیں جس کا علاج, حل, تدراک اور نعم البدل نہیں؟ ہاں یہ الگ بات ہے کہ اللہ نے یہ سب چیزیں اسی دنیا میں ایک خاص ترتیب سے بکھیر دیں تاکہ جو لوگ اللہ کے صابر, شاکر اور…

عالمی اجارہ داری کا ڈانواں ڈول توازن اور امریکہ بہادر ۔۔۔! از بلال شوکت آزادؔ

"امریکہ نے پاکستان کا ملٹری ٹریننگ پروگرام معطل کردیا", رائٹرز کا دعوا اور ڈان کی بھیڑ چال۔ "پروگرام معطل ہونے سے پاک امریکہ تعلقات کو بھاری نقصان ہوسکتا ہے", امریکی حکام۔ "امریکہ نے پاکستان کو یو ایس نیول وار کالج, سائبر سیکیوریٹیز کے…

میں ’’ آزاد ‘‘ ہوں اور ’’ آزاد ‘‘ مروں گا از بلال شوکت آزاد

میں چھٹی والے دن اور اکثر جب فارغ وقت ملے تو دو عظیم انسانوں کی تصویر کئی ثانیوں تک تکتا رہتا ہوں اور وللہ آنسوؤں کو بہنے سے روک نہیں پاتا اور کبھی جب بلکل تنہا ہوتا ہوں تو دھاڑیں مار کر روتا ہوں اور اپنی اس قسمت پر رشک کرتا اور اللہ…

تپتے صحرا میں نخلستان کی تلاش!!!

بٹوارہ, تقسیم اور پارٹیشن کا لفظ جب جب بولا, لکھا, سنا اور پڑھا جاتا ہے تو لاشعور میں فوراً ایک بجلی کا کوندا لپکتا ہے اور لاشعور کے بھی تحت الشعور میں برصغیر, ہندوستان اور آزادی ہند کی گونج سنائی اور منظر دکھائی دینے لگتے ہیں۔ اسے مسلمانان…

کھلا خط بنام چیئر مین تحریک انصاف محترم جناب عمران خان نیازی صاحب اگلے وزیراعظم پاکستان, از بلال…

السلام علیکم عمران خان صاحب, بصد احترام جناب عمران خان صاحب اللہ نے آپ کو 22 سال کی سیاسی محنت اور جدو جہد کے انعام میں آخر پاکستان کی عوام سے اہمیت کا حامل بھرپور مینڈیٹ دلوادیا اور آپ کو آپ کے عوام سے کئیے گئے وعدے من وعن پورے کرنے…

“گمشتگین سے نواز شریف تک۔ ۔ ۔”

التمش/عنایت اللہ صاحب کی تصنیف "داستان ایمان فروشوں کی" بارے سلطان صلاح الدین اور صیلبی جنگوں کے, جب جب پڑھی مجھے سوائے ایک کے باقی ہر ایک اسلام اور مسلمان مخالف کردار پر خوب خوب غصہ آیا, یاد رہے صرف غصہ آیا نفرت و حقارت نہیں جاگی لیکن جب…

ڈیموکریٹک ڈاکٹرائن – جمہوری اور فوجی آمریت کا سدباب!!! بلال شوکت آزادؔ

بہت عرصہ پہلے میں نے ایک تحریر لکھ کر مفصل انداز میں ایک مبینہ ڈاکٹرائن سے پردہ اٹھایا تھا جس کا ہر قابل ذکر سیاسی, اقتصادی اور عسکری پس منظر رکھنے والا ملک نا صرف شکار تھا بلکہ موجود سپرپاور امریکہ ہو یا ماضی کا سپرپارو روس, دونوں سپرپاورز…

کفر ٹوٹا خدا خدا کرکے ۔۔۔ بلال شوکت آزاد

گزشتہ دو روز سے یو این نامی ایک عالمی ادارے کے ماتحت ادارے OHCHR کو ستر سال کی خون ریزی اور حیوانیت کی انتہا دیکھ کر خیال آیا کہ اب سچ تسلیم کرکے ہاتھ کھڑے کر دینے چاہیئے کہ بھارتی مقبوضہ جموں و کشمیر میں تیس سالا جاری بدترین ریاستی ظلم کی…

کشمیر ہماری ترجیح نہیں رہااب ۔۔۔ از بلال شوکت آزادؔ

کشمیر اب ہماری ترجیح نہیں رہا لیکن کشمیریوں کی اول آخر ترجیح پاکستان ہی ہے۔ ان کے پیدا ہونے والے بچے سےلیکر جاتی عمر کے بزرگوں تک سب پاکستان کے نام پر جیتے ہیں اور پاکستان کے نام پر مرتے ہیں۔ ایک وقت تھا جب کشمیر ہمارے سلیبس سے لیکر اطلاعات…

خانگی زنا، جنوبی پنجاب اور فرسودہ رسم ورواج از بلال شوکت آزاد

جیسا کہ عنوان سے ظاہر ہے کہ آج میرے نوک قلم پر ایک ایسا موضوع ایک ایسا مسئلہ بلکہ ہماری ترقی, شعور, تعلیم اور مذہبی عروج کے دعووں کی قلعی کھولتا ہوا ناسور ہے جسے منفی طاقتوں کی علمبردار این جی اوز نے بھی شہرت دولت اور مخصوص ایجنڈے کی تکمیل…